ایسے ہو جائیں گے ایسا تو کبھی سوچا نہ تھا

تھی جلن بیشک مگر تکلیف دہ چھالا نہ تھا

سوز ایسا نہ تھا جب تک آبلہ پھوٹا نہ تھا

اب تو خود مجھ سے مری اپنی شناسائی نہیں

آئینے میں میَں نے یہ چہرہ کبھی دیکھا نہ تھا

وقت کے ہاتھوں نے یہ کیسی لکیریں ڈال دیں

ایسے ہو جائیں گے ایسا تو کبھی سوچا نہ تھا

موسمِ گل میں تھا جس ٹہنی پہ پھولوں کا حصار

جب خزاں آئی تو اس پہ ایک بھی پتا نہ تھا

پیار کے اک بول نے آنکھوں میں ساون بھر دئیے

اس طرح تو ٹوٹ کے بادل کبھی برسا نہ تھا

خامشی سے وقت کے دھارے پہ خود کو ڈال دوں

سامنے میرے کوئی اسکے سوا رستہ نہ تھا

کوئی مجھ کو نہ سمجھ پایا تو کیا شکوہ، مگر

آپ سے تو میرے احساسات کا پردہ نہ تھا

درمیاں میں اجنبیت کی تھی اک دیوار سی

جب تلک میں نے اسے، اُس نے مجھے پرکھا نہ تھا

چاند کو تکتے ہوئے گزریں کئی راتیں مگر

میرے ذہن و فکر میں تسکین تھی سودا نہ تھا

وقت نے کیسے چٹانوں میں دراڑیں ڈال دیں

رو دیا وہ بھی کہ جو پہلے کبھی رویا نہ تھا

جانے کیوں دل سے مرے اسُکی کسک نہیں جاتی

بات گو چھوٹی سی تھی اور وار بھی گہرا نہ تھا

کس لئیے احباب نے تیروں کی زد پہ لے لیا

میں نے تو دشمن کا بھی لوگو بُرا چاہا نہ تھا

(صاحبزادی امتہ القدوس بیگم)

Advertisements

4 تبصرے »

  1. اب تو خود مجھ سے مری اپنی شناسائی نہیں

    آئینے میں میَں نے یہ چہرہ کبھی دیکھا نہ تھا

    beautiful wording

  2. Anonymous said

    wow… asma… kia poem hai yaar… dil ko touch karti hai… keep it up …

  3. Usman said

    SO SUPERB…..asma you have a super collection of poetry
    .. take care and keep it up

  4. اسی وزن میں اک نذرانہ ھماری طرف سے

    فاصلے ایسے ہوں گے، یہ کبھی سوچا نہ تھا
    سامنے بیٹھا تھا مرے اور وہ میرا نہ تھا
    وہ کہ خوشبو کی طرح پھیلا تھا میرے چار سو
    میں اسے محسوس کرسکتا تھا چھو سکتا نہ تھا
    رات بھر پچھلی سی آہٹ کان میں آتی رہی
    جھانک کر دیکھا گلی میں کوئی بھی آیا نہ تھا
    آج اس نے درد بھی اپنے علیحدہ کر لیے
    آج میں رویا تو وہ میرے ساتھ رویا نہ تھا
    یہ سبھی ویرانیاں اس کے جدا ہونے سے تھیں
    آنکھ دھندلائی ہوئی تھی شہر دھندلایا نہ تھا
    یاد کرکے اور بھی تکلیف ھوتی تھی عدیم
    بھول جانے کے سوا اب کوئی چارہ نہ تھا–>

RSS feed for comments on this post · TrackBack URI

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: